70

کیا کپل شرما شو پاکستان کے مشہور کامیڈین نسیم وکی نے شروع کروایا؟

کپل شرما کو کون نہیں آج جانتا، ہر کامیڈی سے لگاو رکھنے والا چاہے وہ بچہ ہو یا بوڑھا، ان کی کامیڈی سے لطف اندوز ہوتے دکھائی دیتے ہیں۔ اِن کا مشہورومعروف کامیڈی شو ’’دی کپل شرما شو ‘‘ نہ صرف انڈیا بلکہ پاکستان میں بھی سب سے زیادہ دیکھے جانے والا شو تھا۔

پاکستان کے ایک شو ’’ مذاق رات ‘‘ میں بات کرتے ہوے مشہور کامیڈین ’’ نسیم وکی ‘‘ نے بتایا کہ دراصل یہ کپل شرما شو انہی کا آئنڈیا تھا اور انہی کی کوششوں سے چل سکا۔ انکا کہنا تھا کہ ۲۰۱۳ میں وہ انڈیا کے ایک شو ’’ لاف انڈیا لاف ‘‘ میں پرفام کرنے گئے تھے جس کو وہ جیت کر واپس آئے اور واپسی پر اُنھوں نے اِنھیں تھیٹر کرنے کا مشورہ دیا۔ نسیم وکی کے واپس آنے کے بعد ا ُنھوں نے ’’ کامیڈی نوٹنکی تھیٹر ‘‘ کے نام سے ایک تھیٹر شروع کیا لیکن جیسا کہ وہ تھیٹر سے نابلد تھے وہ اِس میں کامیاب نہ ہوسکے۔ ٹیم نے نسیم وکی کو واپس آنے کا کہا اور ڈائریکٹر اور رائٹر کام کرنے کا کہا جس کو نسیم نے قبول کیا اور ۲۰ سے ۳۰ قسطیں کیں۔

مزید بات کرتے ہوے نسیم کہتے ہیں کہ ایک رات کپل شرما ان کے پاس آئے اور ایک ساتھ ڈنر کرنے کا کہا۔ ڈنر کے بعد کپل شرما نے ان سے گزارش کی کہ وہ ایک شو شروع کرنا چاہ رہے ہیں اور اس شو کا پلاٹ بھی بتایا۔ نسیم کا کہنا تھا کہ پلاٹ سن کر میں نے کپل کو بتایا کہ یہ وہی آئیڈیا ہے جو میں نے تھیٹر کا پیش کیا تھا۔

نسیم کا کہنا تھا کہ میں نے ہاں کرتے ہوے ’’ کپل شرما شو ‘‘ کے ساتھ مل کر ۲۰ کے قریب شو کیے لیکن چونکہ ہم سب پنجابی تھے اسلئے کوئی گیسٹ شو میں آنے کو تیار نہ تھا۔ مزید براں ہم نے اپنی کوششوں سے انڈیا کے مشہور ایکٹر ’’درمندر ‘‘ کو بلایا اور اس کے بعد ’’ جانی لیور ‘‘ کو بھی پیشکش کی اور ساتھ ساتھ اُنھوں نے ’’ سنیل شیٹھی ‘‘ کو بھی ساتھ لانے کا وعدہ کیا۔ پہلی قسط ریکارڈ ہو گئی اور کپل کا کہنا تھا اگر اس قسط کی ریٹنگ ۲ آ گئی تو ہم سروایو کر جائیں گے ورنہ یہ شو پٹ جائے گا۔

نسیم نے یہ بات بھی واضح کی کہ شو کرنے سے پہلے ’’ شاہ رخ خان ‘‘ اور ’’ بابا رام دیو ‘‘ نے شو میں آنے سے انکار کر دیا لیکن پہلی قسط جسکی ریٹنگ 2.0 ہم نے سوچ رکھی تھی وہ 3.7 تک چلی گئی جس کے بعد ’’ شاہ رخ خان ‘‘ کے ساتھ ساتھ اور بھی بہت لوگوں کی کالز رسیو ہوئیں۔

اس بات کا سننا ہمارے لئے فخر کی بات ہے کہ ایسے مشہورومعروف شو ہمارے اداکاروں کا ہاتھ ہے۔ یہ بات کسی اعزاز سے کم نہیں رہتی کہ ہمارے ملک میں ایسے مایہ ناز فنکار ابھی بھی ہمارے درمیان موجود ہیں جن کی ہم قدر تک نہیں کرتے۔ اجکل کے سٹیج شوز پر فنکاروں کو سراہا نہیں جا سکتا کیونکہ یہ سراسر بے حیائی کے علاوہ اور کچھ نہیں۔

آپ کیا سوچتے ہیں آجکل کے تھیٹرز اور فنکاروں کے بارے میں، ہمیں اپنے رائے کمینٹ میں لازمی بتائیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں