91

کرنسی توہین پر 10لاکھ درہم جرمانہ، ماسک نہ پہننے پر سخت سزائیں

ٹرینیں نہیں چلائیں گے
وفاقی وزیر ریلوے شیخ رشید کا کہنا ہے کہ یا تو ہم ۲۰ مئی ۲۰۲۰ بروز بدھ ٹرینیں چلائیں گے یا پھر عید تک ریلوے بند کر دی جائے گی۔ مزید ان کا کہنا تھا کہ میں اللہ کے سوا اور کسی سے نہیں ڈرتا، صرف عمران خان سے ملاقات کا انتظار ہے۔ ریلوے کسی کے اندر نہیں آتی۔ ان کا شکوہ تھا کہ ساری ٹرانسپورٹ کھول دی گئی لیکن ریلوے پر کیوں پابندی لگائی جا رہی ہے۔ شیخ صاحب کا کہنا تھا کہ ٹرینیں ہی ملک کو ملاتیں ہیں اور اگر بدھ تک اجازت نہ ملی تو چوبیس کروڑ روپے بکنگ کے لوگوں کو واپس کر دئیے جائیں گے۔

کرنسی نوٹ کی توہین پر دس لاکھ درہم جرمانہ
متحدہ عرب امارات میں ایک شخص کو ملکی کرنسی کی توہین کرنے پر گرفتار کر لیا گیا۔ نوجوان نے ملکی کرنسی سے ناک اور جسم پونچھنے کی ویڈیو بنا کر اپلوڈ کی تھی جو کے وائرل ہو گئی۔ پولیس نے اس شخص کو گرفتار کر کےاس کی تصویر بغیر چھپائے پیج پر ڈال دی۔ پولیس کا کہنا تھا ہم آپ طور پر تصویر چھپا دیتے ہیں تا کہ مستقبل میں اس شخص کو نوکری میں مشکلات کا سامنا نہ رنا پڑے۔ لیکن ملکی نشانیوں اور کرونا کے بارے میں غلط افواہیں پھیلانے پر معاف نہیں کیا جائے گا، اور نہ ہی تصویر چھپائی جائے گی۔ مزید براں اس شخص کو دس لاکھ درہم جرمانہ اور قید کی سزا ہو سکتی ہے۔

یہ بھی پڑہیں: عید الفطر کی لمبی چھٹیوں کا اعلان ہوگیا۔

ماسک نہ پہننے پر قطر میں سخت ترین سزا
کرونا کو روکنے کے لئے ہر ملک اپنی سی کوششوں میں لگا ہوا ہے تاکہ اس کے زار کو کم سے کم کیا جا سکے۔ اسی دور میں قطر نے ایلان کیا ہے کی اگر کوئی شخص عوامی جگہوں پر ماسک نہ پہنے ہوئے پایا گیا تو اُسے ۳سال کی قید اور پچپن ہزار ڈالرز تک کا جرمانہ کیا جائے گا۔ یاد رہے قطر میں متاثرین کی تعداد 32ہزار کے قریب اور ہلاکتوں کی تعداد 15 ہو چکی ہے۔

دبئی میں پارک کھولنے کا اعلان
کرونا وائرس کی وجہ سے بند کئے گئے عوامی پارک مرحلہ وار کھولنے کا اعلان کر دیا گیا۔ ڈائریکٹر جنرل آف دبئی کا کہنا ہے کہ ہم نے پارکوں کو تین مرحلوں میں کھولنے کا فیصلہ کیا ہے۔ مرحلہ وار پارکوں کو کھولنے کے ساتھ ساتھ ان میں بتدریج سہولیات کی فراہمی، نگرانی اور احتیاطی تدابیر کی پیش رفت کا بغور جائزہ لیا جائے گا۔

یہ بھی پڑہیں: مفتی عبدالقوی صاحب کو اس رمضان ٹرانسمیشن میں کیوں نہیں بلایا گیا؟ اسلام کے بارے میں کیا بیان دے دیا

پاکستانی اداکارہ نے تھیٹر کھولنے کی حمایت کر دی
اداکارہ تابندہ علی کا کہنا ہے کہ اس لاک ڈاون میں اداکار اذیت کا شکار ہیں۔ ایس او پیز کے تحت تھیٹر بھی کھولنے کی اجازت دی جانی چاہیے۔ مزید ان کا کہنا تھا کہ سٹیج اداکار اس کے علاوہ اور کوئی کام نہیں جانتے۔ تھیٹرز کھلے ہونے کی وجہ سے وہ مصروف رہتے تھے۔ اور اب بند ہو جانے پر گھروں میں قید کی اذیت میں ہیں۔

شاہد آفریدی کشمیر گھر بنانے کے خواہشمند
بوم بوم راشن تقسیم کرنے نکھیال سیکٹر گئے تھے۔ ان کا کشمیر کے لوگوں سے مل کر کہنا تھا کہ ’’ آپ سے مل کر بہت خوشی ہوئی۔ ابھی تھوڑا سا راشن لایا ہوں لیکن آتا جاتا رہوں گا۔ اگر آپ تھوڑی زمین دیں تو یہاں ایک گھر بنانا چاہوں گا ‘‘

مزید خبروں کے لئے ’’ انگلی پوائینٹ ‘‘ کو بک مارک کر کے سبسکرائب کر لیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں